انعامی رقم نہ ملی تو پاکستان کے لیے کھیلنا چھوڑ دوں گا، محمد آصف

If I do not get the money I will stop playing snooker for Pakistan
10فروری2020
(فوٹو فائل)

ویب ڈیسک: (کراچی) عالمی اسنوکر چیمپئن محمد آصف نے کہا ہے کہ اعلان کردہ انعامی رقم نہیں ملی تو اسنوکر کھیلنا ہی چھوڑ دوں گا۔

ایکسپریس کے مطابق عالمی اسنوکر چیمپئمن محمد آصف حکومتی رویہ سے دلبرداشتہ ہیں انہیں حکومت کی جانب سے دوسری بار بھی ورلڈ چمپئین بننے پر انعامی رقم تاحال نہیں ملی ہے جس پر انہوں ںے احتجاجاً اسنوکر چھوڑنے کی دھمکی دی ہے۔

محمد آصف کا کہنا ہے کہ مایوسی کے بادل نہیں چھٹے تو شاید مجھے کوئی بڑا فیصلہ کرنا پڑے، ہو سکتا ہے کہ اسنوکر کھیلنا ہی چھوڑ دوں اور اگر معاملات حل نہ ہوئے تو پاکستان کے لیے کھیلنا چھوڑ دوں گا اور اسنوکر کو صرف اپنی ذات تک محدود کردوں گا، اگر یہی رویہ رہا تو مجھے یہ فیصلہ کرنے میں زیادہ وقت نہیں لگے گا۔

یہ بھی ملاحظہ کیجئے: محمد آصف نے ایک بار پھر ورلڈ اسنوکر چیمپیئن شپ جیتنے کا اعزاز حاصل کر لیا

اسنوکر چیمپئن کا مزید کہنا تھا کہ میں میڈیا والوں سمیت تمام لوگوں کو سوالات کے جواب دیتے دیتے تھک چکا ہوں لہذا ابھی صرف احتجاج کر رہا ہوں لیکن آنے والے وقت میں مستعفیٰ ہونے کا اعلان کر سکتا ہوں تاہم حتمی فیصلہ اپنے گھر والوں سے مشاورت کے بعد فیصلہ کروں گا۔

دریں اثنا عالمی اسنوکر چمپیئِن محمد آصف کو انعامی رقم نہ ملنے پر کھلاڑیوں نے جاری کردہ قومی اسنوکر چیمپئن شپ میں کالی پٹیاں باندھ کر احتجاج بھی کیا۔

Facebook Comments