انگلینڈ پاکستانی کرکٹرز کیلئے محفوظ جگہ ہے، مائیکل ہولڈنگ

England is a safe place for Pakistani cricketers: Michael Holding
25جون2020
(فوٹو فائل)

ویب ڈیسک: (لندن) ویسٹ انڈیز کے سابق فاسٹ بولر مائیکل ہولڈنگ کہتے ہیں کہ پاکستان میں وائرس کی صورتحال زیادہ خراب ہے،اگر کوئی اس ٹور پر اعتراض اٹھا بھی سکتا ہے تو مہمان نہیں میزبان بورڈ ہو گا،وہاں سوشل ڈسٹنس میں بھی کمی کا امکان ہے۔

تفصیلات کے مطابق دورۂ انگلینڈ کیلیے منتخب پاکستانی کرکٹرز کی ایک بڑی تعداد کا کورونا وائرس ٹیسٹ مثبت آیا ہے، جس کے بعد انگلینڈ کو وائرس کے حوالے سے پاکستان کے مقابلے میں زیادہ محفوظ قرار دیا جانے لگا،ویسٹ انڈیز کے سابق کرکٹر مائیکل ہولڈنگ نے کہا کہ پاکستان میں جو حالات ہیں اس سے انگلینڈ زیادہ بہتر ہے، 4 جولائی سے وہ پابندیوں میں مزید نرمی کرے گا، سماجی دوری 6 فٹ سے کم کر کے 3 فٹ ہو سکتی ہے، وہاں صورتحال تیزی سے بہتر ہو رہی ہے۔

اسی لیے پاکستانی کرکٹرز کے اپنے ملک میں رہنے سے زیادہ بہتر انگلینڈ آنا ہو گا،ان کے ملک میں صورتحال خراب ہو چکی، جب وہ انگلینڈ آئیں گے توانھیں بائیوسیکیور ماحول میسر آئے گا، جہاں خطرہ نہیں ہو گا، ویسٹ انڈین ٹیم مانچسٹر میں موجود اور کسی کو بھی کوئی مسئلہ نہیں ہے، کسی کو وائرس ہوا ہوتا تو اب تک سامنے آ جاتا، اس لیے اگر کوئی سمجھتا ہے کہ پاکستانی کھلاڑیوں کو ٹور نہیں کرنا چاہیے تو وہ صرف انگلینڈ کہہ سکتا ہے کیونکہ پاکستان میں اس وقت کورونا وائرس کے زیادہ کیسز سامنے آ رہے ہیں۔

Facebook Comments