سوناکشی سنہا بھارت میں بڑھتی ہوئی انتہا پسندی کیخلاف کھل کر سامنے آ گئیں

sonakshi sinha
10جنوری2020
(فوٹو فائل)

ویب ڈیسک: (ممبئی) بھارت ميں اقلیتوں کے خلاف مودی سرکار کی دہشتگردی تاحال جاری ہے، جس پر بولی ووڈ اداکار بھی کھل کر سامنے آ گئے ہیں، دپيکا پڈوکون کے بعد سوناکشی سنہا نے بھی مودی حکومت کے خلاف آواز اٹھا دی ہے۔

بھارتی اداکارہ دپیکا پڈوکون کی جانب سے جواہر لعل نہرو یونیورسٹی میں انتہا پسند ہندوؤں کے تشدد کا نشانہ بننے والے مسلمان طلبا سے اظہار یکجہتی کرنے پر انہیں بھارت میں تنقید کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔

یہ بھی ملاحظہ کیجئے۔ ہماری طرف آنے والے پتھر رام مندر کی تعمیر میں استعمال کئے جائیں گے! بھارتی پولیس آفیسر

سوشل میڈیا پر بھی دپیکا کے خلاف مہم کا آغاز ہوا تو ايسے ميں بولی ووڈ اداکارہ سوناکشی سنہا دپيکا پڈوکون کی حمايت ميں سامنے آ گئيں۔

یہ بھی ملاحظہ کیجئے۔ بھارت میں اس وقت کیا ہو رہا ہے، واضح علم نہیں: سیف علی خان

سوناکشی سنہا نے ٹوئٹر پيغام ميں سوال کيا کہ کيا آپ تشدد کی حمایت کرتے ہیں؟ اداکارہ نے مودی سرکار کو صاف صاف بتا ديا، يہ خاموش رہنے کا نہيں بلکہ بولنے کا وقت ہے۔

واضح رہے کہ اتوار کو انڈیا کی معروف جواہر لال نہرو یونیورسٹی کے کئی ہوسٹلز میں طلبہ اور اساتذہ پر درجنوں نقاب پوش حملہ آوروں نے حملہ کیا تھا جس میں کئی طلبہ زخمی ہو گئے تھے۔

Facebook Comments