میں مستقبل میں بینظیر بھٹو شہید کا کردار ادا کرنا چاہتی ہوں

Mehwish Hayat
25اکتوبر2019
(فوٹو فائل)

ویب ڈیسک: (کراچی) ٹیلی ویژن پر ڈراموں سے اپنے کیریئر کا آغاز کرنے اور تمغہ امتیاز حاصل کرنے والی
مہوش حیات کا کہنا ہے کہ وہ مستقبل میں بینظیر بھٹو شہید کا کردار ادا کرنے میں دلچسپی رکھتی ہیں۔

ڈراموں میں کامیابی کے جھنڈے گاڑنے والی پاکستان کی اس کامیاب اداکارہ نے 2009ء میں فلم انڈسٹری کا رخ کیا جہاں انہیں یکے بعد دیگرے ’’نامعلوم‘‘ اور ’’جوانی پھر نہیں آنی‘‘ جیسی کامیاب فلمیں ملیں،اور اب وہ پاکستان کی نامور اداکاروں کے لیے ایک مثال ہیں، انہوں نے گزشتہ سال ایوان صدر میں تمغہ امتیاز کا ایوارڈ حاصل کیا تھا جو کہ سول افراد کے لیے پاکستان کا سب سے بڑا ایوارڈ ہے۔

اپنے کیریئر کے دوران انہوں نے پاکستان کے ساتھ بھارتی فلم انڈسٹری سے بھی متعدد فلموں کی آفرز ہوئیں، جس کا اظہار انہوں نے متعدد موقعوں پر بھی کیا۔ برطانوی خبر رساں ادارے بی بی سی کو ایک خصوصی ’’انٹرویو‘‘ کے دوران ان کا کہنا تھا کہ میں سچ کو ترجیح دوں گی اور وہاں پر فلموں میں کام نہیں کروں گی۔

مہوش حیات کا کہنا تھا کہ پاکستان کو بالی ووڈ اور ہالی ووڈ میں جن فلموں کے لیے منتخب کیا جاتا ہے وہ کردار منفی ہوتے ہیں، یہی پوائنٹ میں دنیا بھر میں اجاگر کرتی رہتی ہوں۔ اداکارہ کا کہنا تھا کہ میں لوگوں کو دعوت دیتی ہوں کہ وہ پاکستان آئیں اور دیکھیں، جو ٹی وی پر دکھایا جاتا ہے وہ اس سے کتنا مختلف ہے۔ ہمارے ملک ایک پر امن ملک ہے، یہاں کے لوگ دوسروں سے بہت زیادہ پیار کرتے ہیں، ہم دنیا بھر میں اپنے رویے اور مہمان نوازی کی وجہ سے بہت مشہور ہیں۔

یہ بھی ملاحظہ کیجئے: مہوش حیات کسے اپنا ہیرو مانتی ہیں؟ انہوں نے بتا دیا

مہوش حیات نے اس بات کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ میں شہید محترمہ بینظیر بھٹو کو بہت پسند کرتی ہوں، وہ پاکستان کی پہلی خاتون وزیراعظم تھیں، میں نے ان کے بارے میں بہت زیادہ پڑھا ہے، میں ان سے بہت زیادہ متاثر ہوں لیکن مجھے افسوس بھی ہے کہ ہم نے ایک عظیم رہنما کو کھو دیا ہے۔

انٹرویو کے دوران پاکستانی اداکارہ کا کہنا تھا کہ نئی نوجوان نسل کو ان کے بارے میں پڑھنا چاہیے کیونکہ ان کے بارے میں جاننا چاہیے، میرے لیے خوشی کی بہت ہو گی اگر میں مستقبل میں شہید محترمہ بینظیر بھٹو کا کردار ادا کروں۔

Facebook Comments