فارن فنڈنگ کا فیصلہ تو آگیا – کیا اب والیم 10 بھی کھولا جائے گا؟

Imran khan and nawaz sharif
04اگست2022
( فوٹو: فائل )

ویب ڈیسک: ( اسلام آباد ) پاکستان تحریک انصاف کے رہنما عثمان ڈار کا کہنا ہے کہ ممنوعہ فنڈنگ کیس کا فیصلہ تو سنا دیا اب والیم 10 کو بھی کھول لیا جائے،شریف خاندان کی اندرونی و بیرونی فنڈنگ سمیت منی لانڈرنگ اور لوٹ مار کے وہ خفیہ راز بھی قوم کے سامنے آنے چاہئیں جنہیں اب تک چھپایا گیا ہے۔ قارئین اگر اب تک نہیں جانتے کہ فارن فنڈنگ اور والیم 10 کیا ہے تو آئیے ہم آپ کو بتاتے ہیں۔

فارن فنڈنگ کیس

الیکشن کمیشن آف پاکستان نے پی ٹی آئی کیخلاف فارن فنڈنگ کیس کا فیصلہ گزشتہ روز سنایا اور سابق حکمراں جماعت کو ممنوعہ فنڈنگ لینے پر شوکاز نوٹس بھی جاری کردیا ہے۔ پی ٹی آئی کے بانی رکن اکبر ایس بابر نے پارٹی میں ممنوعہ فنڈنگ کے حوالے سے الیکشن کمیشن میں درخواست دائر کی تھی جس پر یہ فیصلہ آیا ہے۔

والیم 10

پناما اسکینڈل کے بعد شریف خاندان کے مالی اثاثوں کی تحقیقات کرنے والی مشترکہ تحقیقاتی ٹیم (جے آئی ٹی) کی حتمی رپورٹ سپریم کورٹ میں پیش کی گئی جس کا والیم ٹین تاحال معمہ بنا ہوا ہے۔ اس کیس میں اہم بات تو یہ تھی کہ جے آئی ٹی کے سربراہ واجد ضیا کو سپریم کورٹ میں باقاعدہ درخواست دائر کرنا پڑی کہ اس رپورٹ کو کسی صورت منظر عام پر نہ لایا جائے اور اسے سپریم کورٹ نے بغیر کسی اعتراض کے اسے قبول کرلیا۔

جے آئی ٹی نے جلد 10 کو خفیہ رکھنے کی درخواست کرتے ہوئے کہا تھا کہ اس میں نواز شریف اور ان کے اہل خانہ کے اثاثہ جات کی تحقیقات کے لیے غیر ملکی معاونت اور اہم دستاویزات شامل ہیں جبکہ بعض مبصرین کا کہنا ہے کہ اس والیم میں نوازشریف کے ملک دشمنوں سے سازباز اور مالی معاونت بھی شامل ہے۔ اگر پی ٹی آئی کے خلاف فارن فنڈنگ کیس کا فیصلہ سامنے آنے کے بعد ایک بار پھر شریف خاندان کے خلاف والیم 10 کھولنے کے مطالبات سامنے آنے لگے ہیں۔

Facebook Comments