دبئی نے پاکستانیوں‌ کو داخلے سے روک دیا، 1276 واپس بھیج دئیے گئے، وجہ انتہائی اہم

Dubai airport
21اکتوبر2020
(فوٹو فائل)

ویب ڈیسک: (دبئی) متحدہ عرب امارات میں پاکستانی اور بھارتی سفارتی مشنوں نے اپنے شہریوں کو خبردار کیا ہے کہ وہ ملازمت کی تلاش میں سیاحتی ویزے پر یو اے ای کا سفر کرنے سے گریز کریں۔

اخبار گلف نیوز کے مطابق پاکستانی قونصل خانے نے گلف نیوز کو بتایا کہ منگل سے 1374 پاکستانی مسافروں کو دبئی میں داخل ہونے سے روکا گیا۔ مجموعی طور پر 1276 کو واپس بھیج دیا گیا جب کہ 98 اب بھی ہوائی اڈے پر موجود ہیں۔ ترجمان کا کہنا تھا کہ باقی ماندہ مسافروں کو اگلے 24 گھنٹے میں واپس بھجوا دیا جائے گا۔

یہ بھی ملاحظہ کیجئے: سرکاری فیس ادا کریں اور لاکھوں درہم کا انعام پائیں، دبئی حکومت کا اعلان

دوسری جانب بھارتی قونصل خانے نے اخبار کو بتایا ہے کہ اب تک تقریباً تین سو بھارتی شہریوں کو ہوائی اڈے پر روکا جا چکا ہے۔ بعد میں 80 کے قریب مسافروں کو دبئی میں داخل ہونے کی اجازت دے دی گئی جب کہ اس وقت 49 مسافر ہوائی اڈے پر محصور ہیں، جنہیں واپس بھجوانے کی کوشش کی جا رہی ہے۔

یہ بھی ملاحظہ کیجئے: دبئی شارجہ روڈ ٹریفک کے لیے بند، متبادل روٹ کا اعلان

پاکستانی قونصل خانے کے حکام کے مطابق ملک میں متعلقہ حکام کو بتا دیا گیا ہے کہ وہ شہریوں کو وزٹ ویزے پر نوکری کی تلاش میں متحدہ عرب امارات آنے سے روکیں۔ اس مقصد کے لیے ہوائی اڈوں پر دو چیک پوائنٹ قائم کر دیے گئے ہیں جہاں شبے کی صورت میں مسافروں کو وزٹ ویزے پر دبئی کا سفر کرنے سے روک دیا جائے گا۔

فضائی کمپنیوں، ٹریول ایجنٹس اور سفارت کاروں نے بتایا ہے کہ انہیں ہدائت کی گئی ہے کہ پاکستان، بھارت، افغانستان، نیپال اور بنگلہ دیش سے وزٹ ویزے پر آنے شہریوں کے پاس واپسی کا ٹکٹ ہونا ضروری ہے۔

Facebook Comments