کشمیر تنازع پر چین کی طرف سے توقعات کے مطابق ردِ عمل آیا ہے! وزیرِ خارجہ

China reacts to Kashmir dispute as expected!
10اگست2019
(فوٹو فائل)

ویب ڈیسک: (اسلام آباد) وزیرِ خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت کو ختم کرنے کے معاملے پر چین کی طرف سے مثبت ردِعمل سامنے آیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق دورہ چین سے واپسی کے بعد وزیرِ خارجہ شاہ محمود قریشی نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں مظاہرین کے خلاف طاقت کے استعمال پر گہری تشویش ہے، وادی سے شہادتوں کی اطلاعات بھی سامنے آ رہی ہیں۔

انکا کہنا تھا کہ کمیونیکیشن بلیک آؤٹ کی وجہ سے تفصیلات سامنے نہیں آ رہیں۔ مقبوضہ کشمیر میں کرفیو جیسی صورتحال کی وجہ سے غذاؤں اور ادویات کی کمی ہوگئی ہے۔ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ مسئلہ کشمیر پر چینی وزیرِ خارجہ اور دیگر حکام سے تفصیلی بات ہوئی، چین نے جو ردِعمل دیا وہ ہماری توقعات کے عین مطابق ہے، چین نے پھر ثابت کیا کہ وہ پاکستان کا ہر آڑے وقت کا ساتھی ہے، ہمارے اس قومی مسئلے پر چین نے مکمل حمایت کا اعلان کیا۔

یہ بھی ملاحظہ کیجئے۔ چین نے نئی دہلی کو خبردار کرتے ہوئے سنگین نتائج کی دھمکی دے دی

وزیرِ خارجہ نے مزید کہا کہ مسئلہ کشمیر کو سلامتی کونسل میں اٹھانے پر چین نے مکمل حمایت کا یقین دلایا ہے، پاکستان اور چینی وزارتِ خارجہ کے درمیان ڈی جی کی سطح کے فوکل پرسن مقرر کئے جا رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ چین نے واضح پوزیشن لی ہے کہ وہ جموں و کشمیر کو متنازع علاقہ سمجھتے ہیں۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ جمعے کی نماز کیلئے قابض انتظامیہ نے کرفیو اٹھایا تو فوری مظاہرے شروع ہو گئے، بھارتی فوج نے ان پر گولیاں چلائیں، آج کرفیو میں نرمی نہیں تھی لیکن کشمیریوں نے کرفیو توڑ کر احتجاج کیا ہے، لداخ سے بھی بھارت کے خلاف احتجاجی مظاہروں کی خبریں آ رہی ہیں۔

انکا کہنا تھا کہ مقبوضہ کشمیر سے غذائی اشیاء اور دواؤں کی قلت کی خبریں بھی سامنے آنا شروع ہوگئی ہیں، مقبوضہ کشمیر بھارت کا اندرونی معاملہ نہیں ہے، پاکستان اس پر بات کا پورا حق رکھتا ہے، جو کچھ بھارت مقبوضہ کشمیر میں کر رہا ہے وہ نسل کشی ہے۔

واضح رہے کہ مقبوضہ کشمیر میں کشیدہ صورت حال پر چینی حکومت کو پاکستان کے خدشات اور تحفظات سے آگاہ کرنے کیلئے وزیرِ خارجہ شاہ محمود قریشی نے گذشتہ دنوں ہنگامی دورہ چین کیا تھا۔ وزیرِ خارجہ شاہ محمود قریشی ہنگامی دورے میں چینی ہم منصب سے ملاقات کیلئے اسٹیٹ گیسٹ ہاؤس پہنچے تو ان کے وفد کا پرتپاک استقبال کیا گیا اور پاک چین دوستی زندہ باد کے نعرے بھی لگائے گئے۔

Facebook Comments