چونیاں میں تین بچوں کے ساتھ زیادتی کے بعد قتل کرنے والا ملزم گرفتار

01اکتوبر2019

ویب ڈیسک: (لاہور) وزیرِ اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کے مطابق چونیاں میں بچوں کے ساتھ زیادتی اور بعد ازاں قتل کرنے والے ملزم کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے وزیرِ اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کا کہنا تھا کہ سانحہ چونیاں میں بچوں کے ساتھ زیادتی اور قتل کرنے والے ملزم سہیل شہزاد کا ڈی این اے بچوں کے کپڑوں سے ملنے والے ڈی این اے سے میچ کرگیا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ واقعے کی تحقیقات میں 1 ہزار 649 ریکارڈ یافتہ ملزمان کی جیوفینسنگ کی گئی اور 1 ہزار 543 افراد کے ڈی این اے ٹیسٹ لیے گئے، جس میں معلوم ہوا کہ بچوں کے ساتھ زیادتی کرنے والا سیریل کلر یہی شخص ہے۔

یہ بھی ملاحظہ کیجئے۔ چونیاں میں 3 بچوں کے اغوا کے بعد قتل پر شہری مشتعل

انہوں نے مزید کہا کہ ’27 سالہ ملزم رانا ٹاؤن کا رہائشی اور لاہور میں تندور پر روٹیاں لگاتا تھا۔ وزیرِ اعلیٰ کا کہنا تھا کہ جون، اگست اور ستمبر میں بچوں کے ساتھ زیادتی ہوئی اور انہیں قتل کیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ ملزم کو رحیم یار خان سے گرفتار کر لیا گیا ہے۔

وزیرِ اعلیٰ پنجاب نے متاثرہ خاندانوں کو انصاف کی یقین دہانی کراتے ہوئے کیس کی خود نگرانی کرنے کا اعلان بھی کیا۔

یاد رہے کہ صوبہ پنجاب کے ضلع قصور کی تحصیل چونیاں کے بائی پاس کے قریب سے تین بچوں کی لاشیں برآمد ہوئی تھیں، جنہیں مبینہ طور پر اغوا کر کے زیادتی کے بعد قتل کر دیا گیا تھا۔

Facebook Comments