سانحۂ نیوزی لینڈ میں کتنے پاکستانی شہید ہوئے؟ تفصیلات سامنے آ گئیں

christchurch Incident
16مارچ2019
(فوٹو سوشل میڈیا)

ویب ڈیسک: (کرائسٹ چرچ) نیوزی لینڈ کے شہر کرائسٹ چرچ میں گذشتہ روز مسجد میں ہونے والے دہشتگرد حملے کے نتیجے میں 6 پاکستانیوں کی شہادت کی تصدیق ہو چکی ہے۔

تفصیلات کچھ اس طرح ہیں کہ ڈپٹی ہائی کمشنر معظم شاہ کے مطابق سانحہ کرائسٹ چرچ میں 6 پاکستانی شہید ہوئے، 3 پاکستانیوں کی ابھی شناخت نہیں ہو سکی، ڈی این اے سے3 پاکستانیوں کی شناخت کی جائے گی،انہوں نے کہا کہ شہادتوں، ناموں کی فہرست مقامی مسجد کے امام نے پڑھ کر سنائی، مجموعی طورپر9 پاکستانیوں کی گمشدگی کی اطلاعات ملی ہیں۔

یہ بھی ملاحظہ کیجئے۔ نیوزی لینڈ میں کئے گئے دہشتگردانہ حملے کے خلاف دنیا بھر میں مسلمان سراپا احتجاج

ڈپٹی ہائی کمشنر کے مطابق نیوزی لینڈ حکام نے 6 پاکستانیوں کی شہادت کی تصدیق کردی ہے، پاکستانی شہدا میں سہیل شاہد، سید جہاندادعلی، سید اریب احمد، محبوب ہارون، نعیم رشید اور ان کے بیٹے طلحہٰ نعیم شامل ہیں جبکہ ذیشان رضا اور ان کے والدین کی تفصیل جاری کرنے میں کچھ وقت درکار ہے، ان کے بارے میں لوگ کم جانتے تھے، اس لیے تصدیق میں‌وقت لگ رہا ہے۔

انھوں نے کہا کہ کرائسٹ چرچ دہشت گرد حملے میں 50 افراد جاں بحق ہوئے، باقی پاکستانیوں کی ڈی این اے کے ذریعے تصدیق کی جائے گی۔

یہ بھی ملاحظہ کیجئے۔ نیوزی لینڈ کی جامع مسجد میں گھس کر 49 مسلمانوں کو شہید کرنے والا دہشتگرد کون ہے؟

ڈپٹی ہائی کمشنر کا کہنا ہے کہ شہید پاکستانیوں کا ڈی این اےکیا جا رہا ہے، متاثرہ خاندان تدفین سے متعلق جیساچاہیں گے، ویسا ہی کیا جائے گا، فیصلہ لواحقین کریں گےمیتیں پاکستان لانی ہیں یا وہیں تدفین کرنی ہے۔

یاد رہے کہ گذشتہ روز نیوزی لینڈ کی دو مساجد میں دہشت گرد حملے کے نتیجے میں خواتین وبچوں سمیت 50 افراد جاں بحق اور 20 زخمی ہوئے تھے، حملہ آور کی شناخت 28 سالہ برینٹن ٹیرنٹ کے نام سے ہوئی جو ایک آسٹریلوی شہری ہے جس کی تصدیق آسٹریلوی حکومت کر چکی ہے۔

Facebook Comments