افغانستان کی موجودہ صورتحال پر برطانیہ نے اپنی پالیسی واضح کر دی

Dominic Raab
04ستمبر2021
(فوٹو : فائل)

ویب ڈیسک: (اسلام آباد) ہم طالبان کو تسلیم نہیں کرتے اور دیگر ممالک کو بھی ایسا کرنے کا کہیں گے! برطانوی وزیر خارجہ ڈومینک راب نے طالبان مخالف بیان داغتے ہوئے افغانستان کی موجودہ صورتحال پر برطانیہ کی پالیسی واضح کر دی۔

تفصیلات کے مطابق برطانوی وزیر خارجہ ڈومینک راب نے دورہ پاکستان کے حوالے سے ویڈیو بیان میں کہا ہے کہ میں گذشتہ روز قطر کے دورے کے بعد پاکستان میں ہوں، قطر میں وزیر خارجہ سے کابل ایئرپورٹ کی سیکیورٹی اور معاملات چلانے کیلئے انکی کوششوں پر بات کی، پاکستان میں وزیر اعظم عمران خان اور وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی سے ملاقات کی۔

ڈومینک راب نے کہا کہ ملاقاتوں میں پاک افغان سرحد کی صورت حال پر گفتگو ہوئی، میں صورت حال دیکھنے خود طور خم گیا، طورخم پرمیں نے مستقبل میں درپیش آنے والے چیلنجز کا جائزہ لیا، سرحد پار کرنے والے افراد کیلئے سیکیورٹی انتظامات دیکھے۔

یہ بھی ملاحظہ کیجئے۔ طالبان کے خوف سے ملک چھوڑنے والے افغان شہری کن ممالک میں پناہ لے سکتے ہیں؟

برطانوی وزیر خارجہ نے کہا کہ ہم طالبان کو تسلیم نہیں کرتے اور دیگر ممالک سے بھی کہتے ہیں کہ وہ بھی یہی کریں، ہم چاہتے ہیں کہ افغانستان کو کبھی بھی دہشتگردوں کی پناہ گاہ نہ بننے دیا جائے، ہم ہر ایک قدم پر طالبان کو انکے الفاظ نہیں بلکہ عمل سے جج کریں گے۔

Facebook Comments