گذشتہ سال چین کیلئے کیسا رہا؟ چینی صدر نے بتا دیا

Xi Jinping
01جنوری2021
(فوٹو : فائل)

ویب ڈیسک: (بیجنگ) چینی صدر شی جن پنگ نے 2020ء کو غیر معمولی سال قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ چین کے دیہی علاقوں میں موجودہ معیار کے مطابق تقریباً 10 کروڑ افراد غربت سے نجات حاصل کر چکے ہیں۔

تفصیلات کچھ اس طرح ہیں کہ نئے سال 2021ء کی آمد کے موقع پر چینی صدر مملکت شی جن پنگ نے چائنہ میڈیا گروپ اور انٹرنیٹ کے ذریعے مختلف ممالک کے عوام کیلئے نیک تمناؤں کا اظہار کیا۔

چینی صدر نے اپنے پیغام میں 2020ء کو غیر معمولی سال قرار دیتے ہوئے کہا کہ اس سال کورونا وائرس کی عالمی وبا کا سامنا رہا اور اس دوران ہم نے انسانی زندگی کو اوۤلیت دی۔

انھوں نے وبا سے متاثرہ مریضوں کے ساتھ ہم دردی کا اظہار کرتے ہوئے وبا سے نبرد آزما ہونے والے تمام عوامی ہیروز کو سلام پیش کیا اور کہا کہ ہم نے یک جہتی اور ثابت قدمی کے ساتھ اس عالمی وبا کیخلاف جدوجہد کی نئی تاریخ رقم کی۔

چینی صدر نے کہا کہ دنیا کے مختلف ممالک کو ایک ساتھ مل کر وبائی اثرات کے خاتمے کے ساتھ ساتھ ایک مزید خوش حال گھر کی تعمیر بھی کرنی چاہیئے، چین نے وبائی صورت حال کے دوران اہم عالمی معیشتوں میں سب سے پہلے مثبت شرح نمو کا ہدف حاصل کیا، ملکی سطح پر سائنس اور ٹیکنالوجی میں بھی اہم پیش رفت ہوئی۔

شی جن پنگ نے کہا کہ چین کے دیہی علاقوں میں موجودہ معیار کے مطابق تقریباً 10 کروڑ افراد غربت سے نجات حاصل کر چکے ہیں، چین مستقبل میں اصلاحات اور کھلے پن کو مزید پختہ عزم کے ساتھ وسعت دے گا۔

چینی صدر نے کہا کہ 2021ء کمیونسٹ پارٹی آف چائنہ کے قیام کی 100 ویں سالگرہ ہے، ہم پارٹی کے ’عوام کو مرکزی اہمیت دینے‘ کے انتظامی تصور کا اعادہ کرتے ہیں، کیوںکہ درست اقدار اور اخلاقیات کو دنیا بھر میں مقبولیت حاصل ہوتی ہے۔

انھوں نے مزید کہا کہ ہم اس عظیم راستے پر تنہا نہیں ہیں اور پوری دنیا ایک کنبے کی حیثیت رکھتی ہے۔ چینی صدر نے اپنے پیغام میں مختلف ممالک کی سلامتی اور عوام کی خوش حالی کیلئے نیک تمناؤں کا بھی اظہار کیا۔

Facebook Comments