بھارتی پائلٹ ابھینندن کے ساتھ انتہائی شرمناک سلوک! ہیرو سے زیرو

Abhinandan
14مارچ2019
(فوٹو فائل)

ویب ڈیسک: (نئی دلی) پاکستان کی فضائی حدود کی خلاف ورزی کرنے والے اور اسکے بعد پاکستانی فوج کے ہاتھوں گرفتار ہونے والے بھارتی فضائیہ کے ونگ کمانڈر ابھینندن جس کو پاکستان کی حکومت نے جذبہ خیر سگالی کے طور پر بھارت کو واپس کر دیا تھا چھٹیوں پر بھیج دیا گیا ہے۔

بھارتی خبر رساں ایجنسی کے مطابق بھارتی فضائیہ اور دیگر ایجنسیوں نے ونگ کمانڈر ابھینندن کی ڈی بریفنگ مکمل کر لی ہے جس کے بعد انھیں چھٹی پر بھیج دیا گیا ہے۔

بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق بھارتی فضائیہ کے ونگ کمانڈر ابھینندن کو فوج کے ڈاکٹروں کے مشورے پر چھٹی پر بھیجا گیا ہے،چھٹی کے بعد میڈیکل بورڈ ابھینندن کی فٹنس کا دوبارہ جائزہ لے گا،جس کے بعد ابھینندن کے مستقبل کا فیصلہ کیا جائے گا۔

اس سے قبل اطلاعات تھیں کہ پاکستان کے اندر دراندازی کی کوشش میں پکڑے جانے والے بھارتی پائلٹ ابھینندن کو گراؤنڈ کرنے کی تیاریاں کی جا رہی ہیں۔

پاکستان سے واپسی کے بعد ابھینندن کے مختلف میڈیکل ٹیسٹ کیے گئے جس میں پتا چلا کہ اس کی ریڑھ کی ہڈی اور ایک پسلی بھی زخمی ہے لہٰذا اسے مزید میڈیکل چیک اپ سے گزرنا پڑے گا تاہم حقیقت یہ ہے کہ مختلف وجوہات کو بنیاد بنا کر ابھینندن کو گراؤنڈ کرنے کی تیاریاں کی جا رہی ہیں۔

واضح رہے کہ بھارتی فضائیہ کا پائلٹ ابھینندن جب تک پاکستان میں رہا،اس کے ساتھ بہترین سلوک کیا گیا،گرفتاری کے بعد چائے بھی پیش کی گئی اور رخصتی پر کپڑوں کا تحفہ بھی دیا گیا۔

دوسری طرف بھارت نے اپنے ونگ کمانڈر کے ساتھ انتہائی نامناسب برتاؤ کیا،اسے بھارتی وزیر دفاع کے سامنے مجرموں کی طرح پیش کیا گیا اور دس فٹ دور کرسی پر بٹھایا گیا۔

یہ بھی یاد رہے کہ بھارت واپسی کے وقت ونگ کمانڈر ابھینندن کو نہ تو کوئی سیلوٹ مارا گیا اور نہ ہی اسے استقبال کے وقت پھول پیش کی گئے، بھارتی حکام نے اسے قیدیوں کی طرح وصول کیا اور لے کر نکل گئے۔

Facebook Comments