پچاس سے زیادہ شادیاں کرنے کا دعویدار سعودی شخص سامنے آ گیا

Saudi man
13ستمبر2022
( فوٹو: فائل )

ویب ڈیسک: ( ریاض ) سعودی شہری ابو عبداللہ جو 53 شادیاں کرنے کے دعویدار ہیں۔ انہوں نے کہا ہے کہ پہلی شادی 20 سال کی عمر میں کی تھی۔

اور اب ان کی عمر 63 برس ہے۔ایم بی سی چینل سے گفتگو کرتے ہوئے ابو عبداللہ نے بتایا کہ وہ خاموشی سے زندگی گزار رہے تھے کہ ایک دوست نے شادیوں کے حوالے سے ویڈیو سوشل میڈیا پر شیئر کردی۔ابو عبداللہ کو صدی کا سب سے زیادہ شادیاں کرنے والا انسان کہا جا رہا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ ان کے نکاح میں اب صرف ایک خاتون ہیں۔ آئندہ ایک سے زیادہ شادیوں کا کوئی ارادہ نہیں ہے۔‘سبق ویب سائٹ کے مطابق ابو عبداللہ نے کہا کہ ’شروع میں ایک سے زیادہ شادی کا کوئی ارادہ نہیں تھا۔ میں پہلی بیوی سے مطمئن تھا۔ میرے بچے بھی تھے۔ کچھ عرصہ بعد مسائل شروع ہوئے۔ اس وقت میری عمر 23 برس تھی۔

ذہنی آرام و سکون کے لیے دوسری شادی کی اور پہلی بیوی کو اس کی اطلاع دی۔‘ابوعبداللہ کا کہنا ہے کہ پہلی بیوی اور دوسری بیوی کے درمیان جب جھگڑا ہوا تو تیسری اور چوتھی شادی کر ڈالی۔ کچھ عرصہ بعد پہلی اور دوسری بیوی کو طلاق دی۔ اس طرح جب تیسری اور چوتھی میں جھگڑا ہوا تو میں نے تیسری کو بھی طلاق دے دی۔ ابو عبداللہ کا کہنا ہے کہ ’ذہنی آرام و سکون کے لیے شادیاں کرتا رہا۔ تمام بیویوں کے درمیان انصاف سے کام لینے کی کوشش کی۔‘ ’تمام شادیاں یکے بعد دیگرے نہیں کیں۔ پہلی شادی کے وقت میری بیوی مجھ سے چھ سال بڑی تھی۔ ایک شادی ایسی بھی رہی جس کا دورانیہ صرف ایک رات تک محدود رہا۔ تمام شادیاں روایتی انداز میں کیں۔‘ ابو عبداللہ نے کہا کہ ’میری بیشتر بیگمات سعودی رہیں تاہم غیرملکی خواتین سے شادی مجبوری میں کی۔ کاروبار کی غرض سے بیرون مملکت سفر کے دوران غیرملکی خاتون تین، چار ماہ تک میرے نکاح میں رہتی تھی۔ برائی سے بچنے کے لیے ایسا کرتا تھا۔‘

Facebook Comments