ایک برطانوی شخص نے اپنے بچوں کیلئے کروڑوں روپے کی سگریٹ جمع کر لی

A British man has collected billions of cigarettes for his children
29دسمبر2019
(فوٹو اے آر وائے نیوز)

ویب ڈیسک: (لندن) والدین عموماً بچوں کو سگریٹ پیتا دیکھ لیں تو ڈانٹ یا پھر مارنا شروع کر دیتے ہیں تاکہ بچے اس بری لت سے چھٹکارا پاسکیں لیکن ان والد نول گلیغر ایسا بھی ہے جس نے اپنے بچوں کے لیے 4 کروڑ 8 لاکھ سے زائد مالیت کی سگریٹ جمع کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔

غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق اویسس کے سابق راکر نول گلیغر نے غیر صحت بخش عادت کو ترک کردیا لیکن اس نے ہزاروں پیکٹوں کو بچوں کے لیے بچا لیا ہے۔ برطانوی میوسیقار نول کا کہنا تھا کہ جب ان کے بچے سگریٹ نوشی شروع کرتے ہیں تو ان کے پاس ان کے لیے سگریٹ پہلے سے محفوظ ہوں گی۔

یہ بھی ملاحظہ کیجئے: جاپانی کمپنی نے سگریٹ نوشی نہ کرنے والے ملازمین کیلئے خصوصی پیکج کا اعلان کر دیا

52 سالہ نول کے مطابق چار سال قبل غیر صحت بخش عادت ترک کردی تھی لیکن ہزاروں سگریٹ کو بچالیا تھا جسے آج کل دوسرے نام سے جانا جاتا ہے، سالوں میں سگریٹ کے ایک پیکٹ کی لاگت 12 پاؤنڈ تک بڑھ جانے کے بعد اب سگریٹ کی قیمت 28 پاؤنڈ ہو سکتی ہے۔

نول کا کہنا تھا کہ میرے گھر کے تمام کمروں میں سگریٹ کے پیکٹس موجود ہیں اور بچے سگریٹ نوشی کریں گے تو ان کے لیے موجود ہوں گی، ان کے بچوں میں 19 سالہ انائس، 12 سالہ ڈونووان اور 9 سالہ سونی شامل ہیں۔

یہ بھی ملاحظہ کیجئے: سعودی عرب میں سگریٹ نوشی پر کتنا جرمانہ ہو گا ؟

برطانوی موسیقار کا کہنا ہے کہ میں تمباکو نوشی ترک کرنے میں کامیاب رہا، میں کیو ایوارڈز میں گیا، دن اور رات باہر رہا، میں کبھی بھی ہینگ اوور کے ساتھ تمباکو نوشی نہیں کرسکتا تھا لیکن اس کے بعد ہینگ اوور اتنا عرصہ جاری رہا اور میں نے پھر 2 ہفتوں تک سگریٹ پینا چھوڑ دی اور اس کے بعد بس ہو گیا۔

Facebook Comments