شہد کی مکھیوں کی افزائش کیلئے انوکھا طریقہ اختیار کر لیا گیا

The strange way to save the bees!
15جولائی2019
(فوٹو بورڈ پانڈا)

ویب ڈیسک: (ہالینڈ) ہالینڈ میں شہد کی مکھیوں کو بچانے اور ان کی افزائش کیلئے بس اسٹاپ کی چھتوں پر خصوصی سبز پودے اگائے گئے ہیں، جو مکھیوں کو راغب کرتے ہیں۔ اس طرح وہ وہاں رہتے ہوئے زردانے جمع کرسکتی ہیں اور پھلوں کا رس حاصل کر سکتی ہیں۔

تفصیلات کے مطابق آزمائشی طور پر تمام بس اسٹاپ ہالینڈ کے مشہور شہر اترخت میں بنائے گئے ہیں جن کی تعداد 316 سے تجاوز کرچکی ہے۔ صرف ہالینڈ میں مکھیوں کی 358 اقسام پائی جاتی ہیں لیکن بدقسمتی سے ان کی نصف تعداد معدومیت کے خطرے سے دوچار ہے اور حکومت نے اس کا فوری ادراک کرتے ہوئے بس اسٹاپ کو ایک چھوٹے باغ میں بدل دیا ہے۔ اب ان پر سبزہ نظر آتا ہے۔

اس عمل کے بعد توقع کی جا رہی ہے کہ اس طرح شہد کی مکھیاں اور نحل کلاں (بمبل بی) زردانوں کے ذریعے پودوں کی افزائش کر سکیں گی۔ بس اسٹاپ کا سبزہ بارش کے پانی کو جمع کر کے پھلتا پھولتا ہے اور علاقے کو گردوغبار سے بھی بچاتا ہے۔ شاید اگلے مرحلے میں ان کی چھتوں پر سولر پینل بھی لگائے جائیں گے۔ تاہم اس شہر نے یہ اعلان بھی کیا ہے کہ عوامی استعمال کی تمام بسوں کو 2028ء سے ایندھن کے بجائے بجلی سے چلایا جائے گا اور اس طرح شہر مزید ماحول دوست ہو جائے گا۔

Facebook Comments