بھکاریوں کے راز جاننے کیلئے برطانیہ کا ایک فوجی بھکاری بن گیا

British Soldier Became A Begger
14مارچ2019
(فوٹو سوشل میڈیا)

ویب ڈیسک: (لندن) انگلینڈ میں بھکاریوں کے حالات جاننے کی غرض سے برطانوی فوج کے ایک کپتان نے دو ماہ تک بھکاریوں کے ہمراہ وقت گزارا،جس کے بعد وہ یہ جان سکے کہ یہ بھکاری عام شہریوں سے زیادہ دولت مند ہوتے ہیں۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق اسٹیفورڈ نامی ایک شخص جو برطانوی برّی فوج میں کیپٹن ہیں انہوں نے ایک خفیہ مہم کے لیے دو ماہ تک بھکاری کا روپ دھارا اور سڑکوں اور فٹ پاتھوں پر بھکاریوں کے ہمراہ رہے، اس دوران انہوں نے بھکاریوں کی مشکوک حرکات،طرزِ حیات اور مافیاز پربھی نظر رکھی۔

اسٹیفورڈ نے اپنی مہم کے دوران لندن، مانچسٹر اور گلاسکو جیسے بڑے شہروں کی سڑکوں پر دن رات گزارے، اس دوران انہوں نے کھانا پینا اور دیگر معمولات بھکاریوں کے ساتھ ہی انجام دیئے جس کے بعد چونکا دینے والی کہانیاں اور کردار سامنے آئے۔
اسٹیفورڈ یہ جاننے میں کامیاب ہوئے کہ یہ ایک مکمل مافیا ہے جس میں ملک کی جاسوسی سے لے کر منشیات و اسلحہ فروشی تک کی سطح ہموار ہے۔
برطانوی فوجی نے اپنی مہم کے حوالے سے سب سے بڑا انکشاف یہ کیا کہ تقریباً تمام ہی بھکاری ایک اوسط برطانوی شہری سے زیادہ امیر تھے، ایک بھکاری ماہانہ 6 ہزار پاؤنڈ تک کمالیتا ہے جب کہ کھانا پینا بھی مفت ہوتا ہے،بھکاریوں کے پاس موجود رقم منشیات اور جوئے میں بھی استعمال ہوتی ہے۔

کیپٹن اسٹیفورڈ نے مزید بتایا کہ کچھ بھکاری ایسے بھی تھے جن کی ماہانہ آمدنی ایک سپاہی سے بھی زیادہ تھی جب کہ ملازمت کے اوقات کار ایک سپاہی کے نصف سے بھی کم تھے جبکہ کچھ بھکاری بھاری رقم اپنے اہلِ خانہ کو بھی بھیجتے تھے۔

Facebook Comments