ایک لائٹر نے ہر طرف کورونا کورونا کر دیا

Lighter
30جون2020
(فوٹو : ان سپلیش)

ویب ڈیسک: (سڈنی) آسٹریلیا میں ایک لائٹر نے درجنوں لوگوں کو کورونا وائرس کا مریض بنا دیا، ایک ہوٹل کا عملہ اس کورونا زدہ لائٹر کو بار بار استعمال کرتا رہا۔

کورونا وائرس کا پھیلاؤ جہاں کئی خوفناک خبریں لایا ہے وہیں اس کے پھیلاؤ کی وجہ بننے والی کئی حیران کن خبریں بھی سامنے آئی ہیں، ایسی ہی ایک خبرآسٹریلیا سے سامنے آئی ہے جس میں بتایا گیا ہے کہ کس طرح سماجی فاصلہ برقرار رکھنے اور احتیاط کرنے کے باوجود ایک سگریٹ لائٹر کورونا وائرس پھیلانے کی وجہ بن گیا۔

برطانوی نشریاتی ادارے بی بی سی کے مطابق آسٹریلیا نے اگرچہ کورونا وائرس کی وبا پر قابو پا لیا ہے لیکن اس کی ریاست وکٹوریا میں نئے متاثرین کی تصدیق ہوئی ہے۔

ریاست وکٹوریا کے حکمران ڈینئل اینڈریوس کا کہنا ہے کہ یہ وبا سگریٹ کے ایک لائٹر سے پھیلی، لائٹر کا ہوٹل میں موجود عملے نے ایک دوسرے سے تبادلہ کیا۔

ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے ڈینئل اینڈریوس کا کہنا تھا کہ وہ افراد سماجی فاصلہ تو رکھ رہے تھے لیکن ایک دوسرے سے لائٹر شیئر کر رہے تھے۔ ان کے مطابق عملہ بھی ایک دوسرے کی گاڑیوں میں سفر کرتا تھا، جس کا مطلب ہے کہ وہ ہمارے معیار کے برعکس ایک دوسرے سے قریبی رابطہ بھی رکھے ہوئے تھے۔

انھوں نے کہا کہ باہر ممالک سے آنے والوں کیلئے وکٹوریا کی انتظامیہ اب ٹیسٹنگ ضروری قرار دے رہی ہے۔ ریاست میں اتوار کو 49 متاثرین سامنے آئے ہیں۔ یہ دو ماہ میں یومیہ متاثرین کی سب سے بڑی تعداد بنتی ہے۔

خیال رہے کہ دنیا بھر میں اب تک ایک کروڑ سے زیادہ افراد کورونا سے متاثر ہو چکے ہیں جبکہ ہلاکتوں کی تعداد چار لاکھ 97 ہزار سے تجاوز کر چکی ہے۔

یہ بھی ملاحظہ کیجئے۔ کورونا کی احتیاطی تدابیر پر عمل نہ کرنے والے تارکین وطن کو ملک بدر کر دیا جائیگا

پاکستان میں متاثرین کی تعداد دو لاکھ سے تجاوز کر چکی ہے جبکہ اموات کی تعداد 4118 ہے۔ متاثرین کی تعداد میں صوبہ سندھ جبکہ اموات کے اعتبار سے پنجاب سرفہرست ہے۔

یہ بھی ملاحظہ کیجئے۔ پان چبانا آپکو اور دوسروں کو کورونا میں مبتلا کر سکتا ہے

دنیا کا سب سے زیادہ متاثرہ ملک امریکہ ہے جہاں متاثرین کی تعداد 25 لاکھ سے زیادہ ہے جبکہ ایک لاکھ 25 ہزار سے زائد ہلاکتیں ہو چکی ہیں۔

یہ بھی ملاحظہ کیجئے۔ ہائی بلڈ پریشر کے مریضوں‌ کو کورونا کی تشخیص کے بعد کیا کرنا چاہیے؟

برازیل دنیا میں متاثرین کی تعداد کے اعتبار سے اب برطانیہ کو پیچھے چھوڑتے ہوئے اموات کی تعداد میں بھی دوسرے نمبر پر آ چکا ہے۔

Facebook Comments