جدید طرز زندگی بچوں کی صحت پر کیسے اثر انداز ہو رہی ہے؟

Modern Life Style Of Children
13اپریل2019
(فوٹو فائل)

ویب ڈیسک: (سڈنی) عالمی تحقیقاتی ادارے کی رپورٹ میں انکشاف ہوا ہے کہ جدید طرز زندگی کی وجہ سے دنیا بھر کے بچوں کی نشوونما، صحت اور آگے بڑھنے کی صلاحیتیں تیزی سے ختم ہورہی ہیں۔

تفصیلات کے مطابق آسٹریلیا کے معروف تحقیقاتی ادارے (ایکٹو ہیلتھی کڈز گلوبل الائینس) کی جانب سے جاری ہونے والی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ جوں جوں سائنس ترقی کی منازل طے کرتی جا رہی ہے نئی نسل تباہی کی طرف گامزن ہے۔ مذکورہ رپورٹ میں انکشاف کیا گیا ہے کہ موجودہ دور میں ہونے والی سائنسی ایجادات کی وجہ سے بچوں کا زیادہ تر وقت اسکرین پر گزرتا ہے جس کی وجہ سے وہ کھیل کود کی طرف راغب نہیں ہوتے اور نتیجے میں انکی صحت اور نشونما پر نہایت منفی اثرات مرتب ہو رہے ہیں۔

یہ بھی ملاحظہ کیجئے۔ اپنے بچوں کو جسمانی طور پر فعال رکھیں ورنہ وہ بیمار پڑ جائیں گے

تحقیق میں یہ بھی بتایا گیا ہے کہ ’موبائل فون کے بڑھتے ہوئے استعمال کی وجہ سے بھی بچوں کی ذہنی صلاحیتیں متاثر ہورہی ہیں اور اسی وجہ سے انکی آگے بڑھنے کی صلاحتیں کم ہوتی جا رہی ہیں۔ ماہرین نے مشاہدہ کیا کہ کھیل کود، بھاگ دوڑ کی وجہ سے بچوں کے اعصاب مضبوط ہوتے ہیں اور اُن کی نشوونما تیزی سے ہوتی تھی، اگر جدید طرز زندگی اختیار کرنے کی یہی روش جاری رہی تو آئندہ کی صورتحال بہت زیادہ سنگین ہونے کے امکانات ہیں۔

یہ بھی ملاحظہ کیجئے۔ بچوں کو کیا کھلایا جائے کہ انہیں ذائقے کے ساتھ ساتھ طاقت بھی میسر آئے؟

اے ایچ کے جی اے کے (ایکٹو ہیلتھی کڈز گلوبل الائینس) صدر ٹریمبلے نے کہا ہے کہ سائنسی ایجادات کی وجہ سے ہمارے بچے معاشرے سے بہت دور ہوگئے ہیں اور اسی وجہ سے ہی وہ معذوری کی طرف تیزی سے بڑھ رہے ہیں۔

تحقیق میں یہ بھی بتایا گیا ہے کہ 49 ممالک کے بچوں کی روزانہ کی سرگرمیوں کو دیکھا گیا جس کے دوران یہ معلوم ہوا کہ زمبابوے، جاپان کے بچے دیگر ممالک کے مقابلے میں قدرے متحرک اور جسمانی طور پر فٹ ہیں۔ ماہرین کہتے ہیں کہ ٹرانسپورٹ، موبائل کی سہولیات اور ویڈیو گیمز بچوں کی نشوونما کو متاثر کرنے میں اہم کردار ادا کررہے ہیں۔ تحقیقاتی ماہرین نے والدین کو تجویز دی ہے کہ وہ روزانہ بچوں کے ساتھ چہل قدمی کیا کریں اور انہیں کھیل کود کی طرف متوجہ بھی کریں۔

Facebook Comments