رونے سے دماغی صلاحیتوں میں نکھار آتا ہے۔ ماہرین صحت کا دعویٰ

07فروری2019
(فوٹو بشکریہ جے پی این انفو ڈاٹ کام)

ویب ڈیسک: (ٹوکیو) جاپان کے طبی ماہرین کا کہنا ہے کہ ہفتے میں کم از کم پندرہ منٹ تک اگر رو لیا جائے تو اس سے دماغی صلاحیتیں نکھرتی ہیں۔

تفصیلات کچھ اس طرح ہیں کہ جاپان کے ماہرین صحت نے دماغی صلاحیتیوں میں نکھار لانے اور ذہنی تناؤ کو کم کرنے کی غرض سے ایک تحقیقاتی مطالعہ کیا جس میں مندرجہ ذیل نکات زیر غور آئے۔

ماہرین صحت نے ذہنی تناؤ کو کم کرنے کیلئے چہل قدمی اور مختلف ادویات کے استعمال کا بغور مشاہد کیا ،یہ تمام حربے بھی سود مند ثابت ہوئے مگر دلچسپی والی بات یہ ہے کہ اس دوران رونے کے حیرت انگیز فوائد بھی سامنے آئے۔

تحقیقاتی ٹیم کا کہنا ہے کہ دماغی صحت اور اسکی کارکردگی کو بہتر بنانے کیلئے ہنسنے کا عمل بھی کارگر ہے لیکن اگر ہفتے میں ایک بار پندرہ منٹ تک کھل کر رو لیا جائے تو اس سے دماغ پر نہایت مثبت اثرات مرتب ہوتے ہیں۔

ماہرین نے یہ بھی کہا کہ اگر انسان مشکل حالات میں رو لے تو اس سے نہ صرف دل ہلکا ہو جاتا ہے بلکہ یہ عمل غم بھلانے میں بھی اہم کردار ادا کرتا ہے۔

واضح رہے کہ جاپان ان ملکوں میں شمار ہوتا ہے جہاں کے لوگ اپنی زندگیوں کو بہتر بنانے کیلئے انتہائی مصروف رہتے ہیں،اسی وجہ سے جاپان میں متعدد کمپنیوں نے ملازمت دینے کیلئے سونے کی شرط عائد کر رکھی ہے تاکہ ملازمین کا ذہنی تناؤؤ کم ہو سکے۔

مذکورہ تحقیق کے بعد جاپانی میڈیا کا کہنا ہے کہ جاپان کے اسکولوں اور دفاتر میں رونے کے فوائد کی آگہی دی جانے لگی ہے،جبکہ لوگ اس مقصد کیلئے جذباتی فلمیں بھی دیکھنے کی خواہش رکھتے ہیں تا کہ کچھ دیر رو کر اپنے غم کو بھلایا جا سکے اور دماغی صلاحیتیوں میں بھی اضافہ کیا جا سکے۔

Facebook Comments